جرمنی حکومت غیر مُنَظَّم مہاجرین کی الجزائر، مراکش، تیونس اور جارجیا کے لئے واپسی کے طریقہ کار کو درست کرنا چاہتی ہے۔

کیروان، تیونس کی سڑکوں پر لوگ ©istockphoto، IdealPhoto30

جرمنی کی وفاقی حکومت کی کابینہ نے الجزائر، مراکش، تیونس اور جارجیا کو "محفوظ بنیادی ممالک” کے زمرہ میں شامل کرنے کا فیصلہ کیا ہے، جس کے ذریعہ غیر منظم مہاجرین کو، جنہوں نے جرمنی میں حق سکونت حاصل نہیں کیا ہے، واپس کرنا آسان ہوجائے گا۔   اس سے پہلے کہ یہ تبدیلی قانونی شکل اختیار کرے، اس کا جرمنی کی دو قانون ساز اسمبلیوں – بندسرات اور بندستیگ – سے پاس ہونا ضروری ہے۔ اگر یہ دونوں ادارے اس قانون کے حق ميں جانے کا فیصلہ کرتے ہیں تو اس کے اثرات اور نتائج کے بارے میں مزید معلومات حاصل کریں۔ 

محفوظ بنیادی ممالک کیا ہیں؟

جرمنی ان ممالک کو محفوظ خیال کرسکتا ہے جن کے شہریوں کو منظم طور پر عدالتی کارروائیوں، ظلم، ذلت آمیز معاملات اور فسادات میں تشدد کا شکار ہونے کا کم خطرہ لاحق ہو۔ جرمنی حکومت نے اپنے اتحادی معاہدے میں ان ممالک کو محفوظ قرار دینے کا فیصلہ لیا تھا جن کے شہریوں کو جرمنی میں پناہ حاصل کرنے کی درخواست پر شاذ و نادر ہی پناہ گزیں کا درجہ یا کوئی اور حق سکونت دی گئی ہو۔ یہی حال الجزائر، مراکش، تیونس اور جارجیا کا ہے: ان ممالک کے درخواست دہندگان میں سے پچھلے سالوں میں پانچ فیصد سے کم کو پناہ گزیں کا درجہ یا کوئی دوسرا تحفظ دیا گیا ہے۔

اس کے نتائج کیا ہیں؟

جب محفوظ بنیادی ممالک کے شہری جرمنی میں پناہ لینے کی درخواست دیں گے تو انہیں وہ تمام اہم معلومات فراہم کراني پڑیں گی کہ قانون کے مطابق انہیں کیوں اور کیسے تحفظ کی ضرورت ہے۔ اگر توضیح کافی نہ ہوئی تو آپ کی درخواست "واضح طور پر ناحق” کی حیثیت سے رد کردی جائیگی۔ درخواست کی کارروائی پر تیزرفتار طریقہ سے عمل ہوگا اور اس کے نتیجہ میں غیرمنظم مہاجرین کو ان کے محفوظ بنیادی ممالک میں جبرا واپس کیا جائے گا اگر وہ بذات خود واپس ہونے پر راضی نہ ہوئے۔

شہر چیاترا، جارجیا ©istockphoto، Holger Dürkop

 کیا نئے قوانین میں کوئی چھوٹ موجود ہے؟

بے شک، "محفوظ بنیادی ممالک” کی درجہ بندی ان ممالک کے پناہ گزینوں کی حفاظت کے جرمنی کے عزم میں کوئی تبدیلی نہيں لاتی – وہ تمام لوگ جنہیں جنیوا کنونشن اور جرمنی کے قوانین کے تحت حفاظت کی ضرورت ہوگی انہیں جرمنی میں حق سکونت عطا کیا جائے گا۔ حکومت ان ممالک کے پناہ گزینوں میں سے خاص طور سے غیر محفوظ افراد کو خصوصی قانونی صلاح فراہم کرانے پر کام کر رہی ہے۔ مزید یہ کہ الجزائر، مراکش، تیونس اور جارجیا کے تمام پناہ گزیں درخواست دہندگان جو کہ حالیہ جرمنی میں کام کررہے ہیں درخواست برائے پناہ پر حتمی فیصلہ ہونے تک اپنا کام جاری رکھیں۔

کیا محفوظ بنیادی ممالک پہلے سے ہیں اور کیا مزید ممالک اس میں شامل کئے جا سکتے ہیں؟

یورپی اتحاد کے تمام ممالک محفوظ بنیادی ممالک سمجھے جاتے ہیں، اسی کے ساتھ ساتھ آٹھ دوسرے ممالک بھی اس میں شامل ہیں: گھانا، سینیگال، بوسنیا اور ہرزیگوینا، سربیا، مقدونیہ، البانیہ، کوسوو اور مونٹینیگرو۔ مستقبل میں دوسرے ممالک کو اس زمرہ میں شامل کیا جا سکتا ہے۔ 

اشاعت: 07/30/2018